PRCS distributes more relief packages to flood-affected families in Jacobabad

Home  /  Direct from the field  /  Current Page

PRCS distributes more relief packages to flood-affected families in Jacobabad

The Pakistan Red Crescent Society (PRCS) provided relief items to 500 flood-affected households in Jacobabad. PRCS Chairman Sardar Shahid Ahmed Laghari and the IFRC Head of Delegation (HoD) in Pakistan, Peter Ophoff, distributed the relief items among affected families, which included tarpaulin sheets, jerry cans, a kitchen set, a shelter toolkit, blankets, mosquito nets, and a family-sized tent.

 

Speaking on occasion, Chairman Sardar Shahid Laghari said that the Pakistan Red Crescent has helped thousands of flood-affected families, especially in areas where no other organisation has reached due to lack of access, and this would continue until the last victim is helped. He further said that PRCS has already distributed relief items in Jacobabad and will continue. “Tomorrow, we are going to distribute relief items to the flood-affected people in Kashmore and then Dadu,” said the PRCS chairman.

IFRC HoD in Pakistan Peter appreciated the PRCS efforts and said that PRCS and the IFRC would continue relief operations to help those who need it most.

PRCS Secretary General Ubaidullah Khan said that PRCS is also providing more than 15000 gallons of safe drinking water daily to more than 2000 flood-affected people in the Jacobabad district.

While taking on the occasion, Provincial Secretary of PRCS-Sindh Kanwar Waseem said that we are facing the biggest catastrophe in our history, and everyone in the Red Crescent is working around the clock to provide relief supplies to those in need in the 12 most vulnerable districts. He added that PRCS mobile health units consisting of male and female doctors are treating and providing free medicines in flood-affected districts.

######################

پاکستان ریڈ کریسنٹ کیجانب سے جیکب آباد میں سیلاب سے متاثرہ گھرانوں میں مزید امدادی سامان تقسیم

امدادی پیکیج میں گھریلو سامان، تارپولین شیٹس، کچن سیٹ، شیلٹر ٹول کٹ، جیری کین، کمبل، مچھر دانیاں اور فیملی ٹینٹ شامل ہے

متاثرین سیلاب کی مدد اور خدمت ہلالِ احمر کی اوّلین ترجیح ہے، چیئرمین سردار شاہد احمد لغاری

کراچی/ جیکب آباد: پاکستان ریڈ کریسنٹ سوسائٹی (ہلالِ احمر پاکستان) کے زیر اہتمام جیکب آباد میں سیلاب سے متاثرہ مزید 500 گھرانوں میں امدادی سامان تقسیم کیا گیا۔ چیئرمین ہلالِ احمر پاکستان سردار شاہد احمد لغاری اور پاکستان میں آئی ایف آر سی کے سربراہ پیٹر اوفوف نے متاثرہ خاندانوں میں امدادی سامان تقسیم کیا جس میں تارپولین شیٹس، کچن سیٹ، شیلٹر ٹول کٹ، جیری کین، کمبل، مچھر دانیاں اور فیملی ٹینٹ شامل تھے۔ اس موقع پر چیئرمین سردار شاہد لغاری نے کہا کہ ہلالِ احمر پاکستان نے سیلاب سے متاثرہ ہزاروں خاندانوں کی مدد کی ہے، خاص طور پر ان علاقوں میں جہاں کوئی اور ادارہ رسائی نہ ہونے کی وجہ سے نہیں پہنچا، اور یہ سلسلہ آخری متاثرین کی مدد تک جاری رہے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہلالِ احمر پاکستان پہلے ہی جیکب آباد میں امدادی سامان تقسیم کرچکا ہے اور یہ عمل آگے بھی جاری رہے گا۔ چیئرمین ہلالِ احمر پاکستان نے کہا کہ کل، ہم کشمور اور پھر دادو میں سیلاب سے متاثرہ لوگوں میں امدادی سامان تقسیم کرنے جا رہے ہیں۔ پاکستان میں آئی ایف آر سی کے سربراہ پیٹر نے پاکستان ریڈ کریسنٹ کی کوششوں کو سراہا اور کہا کہ پاکستان ریڈ کریسنٹ اور آئی ایف آر سی ضرورتمند لوگوں کی مدد کے لیے امدادی کارروائیاں جاری رکھیں گے۔

پاکستان ہلال احمر کے سیکرٹری جنرل عبید اللہ خان کا کہنا تھا کہ پاکستان ریڈ کریسنٹ جیکب آباد ضلع میں اپنے ایک واٹر پلانٹ سے یومیہ 15,000 گیلن سے زیادہ پینے کا صاف پانی فراہم کر رہا ہے جس سے روزانہ 2000 سے زیادہ سیلاب متاثرہ خاندان مستفید ہورہے ہیں۔ انہوں نے یہ عزم ظاہر کیا کہ پاکستان ریڈ کریسنٹ آخری متاثرین کی بحالی تک اپنا کام جاری رکھے گا۔ اس موقع پر پاکستان ریڈ کریسنٹ کی سندھ برانچ کے صوبائی سیکرٹری کنور وسیم نے کہا کہ ہم اپنی تاریخ کی سب سے بڑی تباہی کا سامنا کر رہے ہیں اور پاکستان ریڈ کریسنٹ کا ہر فرد بشمول انتظامیہ، عملہ اور رضاکار سیلاب سے نمٹنے کے لیے چوبیس گھنٹے کام کر رہا ہے اور اب تک ہم 12 متاثرہ اضلاع میں ہزاروں ضرورت مندوں کو امدادی سامان فراہم کرچکے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ مرد اور خواتین ڈاکٹروں پر مشتمل پاکستان ریڈ کریسنٹ کی موبائل ہیلتھ یونٹس سیلاب سے متاثرہ اضلاع میں مفت علاج اور ادویات فراہم کر رہے ہیں۔
//////////////////////


Seven Fundamental Principles