Cash and Food Distributed among flood affected People in Sehwan

Home  /  Direct from the field  /  Current Page

Pakistan and Turkish Red Crescent distribute cash grants and food packages to flood-affected families in Sehwan

The Pakistan Red Crescent Society (PRCS), in collaboration with the Turkish Red Crescent (TRC), distributed cash grants and food packages to 500 flood-affected families in Sehwan, District Jamshoro. PRCS Chairman Sardar Shahid Ahmed Laghari and the IFRC Head of Delegation (HoD) in Pakistan, Peter Ophoff, and the Head of TRC in Pakistan, Ibrahim Carlos, disbursed a cash grant of 5000 rupees and distributed 50 kg of food to 500 families.

Chairman Sardar Shahid Laghari remarked that the Pakistan Red Crescent has assisted thousands of flood-affected families, especially in places where no other organization has reached owing to lack of access, and would continue until the last victim is helped. This is the third time relief assistance has been distributed in Sehwan with the support of the Turkish Red Crescent; earlier food packages from the German Red Cross and Non-Food Items from the Norwegian Red Cross have also been distributed in Sehwan, added Chairman PRCS. He also said that for the past two months, PRCS has been providing more than 15000 gallons of safe drinking water daily to more than 2000 flood-affected people in the Sehwan.

Peter, the IFRC HoD in Pakistan, and two Turkish businessmen and TRC volunteers, Fatih Elmali and Tahsin Yazan, who observed the distribution, praised PRCS and stated relief activities should be continued to support people in need. Ubaidullah Khan, Secretary General of the PRCS, thanked the Turkish people and government and praised the efforts of local volunteers.

Kanwar Waseem, Provincial Secretary of PRCS-Sindh, acknowledged the Turkish Red Crescent for assisting the flood-affected families. “More flood-afflicted people are waiting for assistance,” said Provincial Secretary.

################

        پاکستان اور ترک ہلال احمر کی جانب سے سیہون میں سیلاب سے متاثرہ مزید 500 خاندانوں میں نقد گرانٹ اور فوڈ پیکجز تقسیم

500 گھرانوں میں فی کس 5000 روپے اور 50 کلو راشن پیکیج تقسیم کیا گیا

متاثرین سیلاب کی مدد اور خدمت ہلالِ احمر کی اوّلین ترجیح ہے، چیئرمین  سردار شاہد احمد لغاری

کراچی/ سیہون: پاکستان ریڈ کریسنٹ سوسائٹی (ہلالِ احمر پاکستان) نے ترک ہلال احمر کی تعاون سے ضلع جامشورو تعلقہ سیہون میں سیلاب سے متاثرہ 500 خاندانوں میں نقد گرانٹ اور فوڈ پیکجز تقسیم کئے گئے۔ چیئرمین ہلالِ احمر پاکستان سردار شاہد احمد لغاری، پاکستان میں آئی ایف آر سی کے سربراہ پیٹر اوفوف اور پاکستان میں ترک ہلال احمر کے سربراہ ابراہیم کارلوس نے فی خاندان 5000 روپے کی نقد گرانٹ اور 50 کلو جا راشن پیکج تقسیم کیا۔

چیئرمین سردار شاہد لغاری نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوے کہا کہ پاکستان ہلال احمر نے ہزاروں سیلاب سے متاثرہ خاندانوں کی مدد کی ہے، خاص طور پر ان جگہوں پر جہاں تک رسائی نہ ہونے کی وجہ سے کوئی دوسری تنظیم نہیں پہنچی اور آخری متاثرین کی مدد تک ہمارا کام جاری رہے گا۔ یہ تیسرا موقع ہے جب ترک ہلال احمر کے تعاون سے سیہون میں امداد تقسیم کی گئی ہے۔ چئیرمین ہلالِ احمر پاکستان نے مزید کہا کہ جرمن ریڈ کراس کی جانب سے پہلے فوڈ پیکجز اور نارویجن ریڈ کراس کی جانب سے نان فوڈ آئٹمز بھی سیہون میں تقسیم کیے جا چکے ہیں۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ گزشتہ دو ماہ سے پاکستان ریڈ کریسنٹ سیہون میں سیلاب سے متاثرہ 2000 سے زائد لوگوں کو روزانہ 15000 گیلن سے زیادہ پینے کاصاف پانی فراہم کر رہا ہے۔

پاکستان میں آئی ایف آر سی کے سربراہ پیٹر اور دو ترک تاجروں اور ترک ہلال احمر کے رضاکاروں فتح المالی اور تحسین یزان جو کہ سیہون میں منعقد امدادی سامان کی تقسیم کی تقریب میں موجود تھے، انہوں نے پاکستان ریڈ کریسنٹ کی تعریف کی اور کہا کہ ضرورت مند لوگوں کی مدد کے لیے امدادی سرگرمیاں جاری رکھی جانی چاہئیں۔ پاکستان ہلال احمر کے سیکرٹری جنرل عبید اللہ خان نے ترک عوام اور حکومت کا شکریہ ادا کیا اور سیہون میں کام کرنے والے ہلال احمر کے رضاکاروں کے کام کو سراہا۔

پاکستان ہلال احمر سندھ کے صوبائی سیکرٹری کنور وسیم نے سیلاب سے متاثرہ خاندانوں کی مدد کرنے پر ترک ہلال احمر کا شکریہ ادا کیا اوران کہنا تھا کہ سیلاب سے متاثرہ مزید افراد اب بھی امداد کے منتظر ہیں۔

####################


Seven Fundamental Principles